مسلسل دوسرے دن، ایک ہی دن میں دوسری مرتبہ شدید زلزلہ

مسلسل دوسرے دن، ایک ہی دن میں دوسری مرتبہ شدید زلزلہ

بلوچستان کے کئی علاقوں میں بدھ کے روز زلزلے کے شدید جھٹکوں نے شہریوں کو خوفزدہ کر دیا

خضدار   20 مارچ2024ء) مسلسل دوسرے دن، ایک ہی دن میں دوسری مرتبہ شدید زلزلہ۔ تفصیلات کے مطابق بلوچستان کے کئی علاقوں میں بدھ کے روز زلزلے کے شدید جھٹکوں نے شہریوں کو خوفزدہ کر دیا۔ بدھ کی شب کو خضدار اور دیگر علاقوں میں زلزلے کے شدید جھٹکوں کے بعد شہری خوفزدہ ہو کر گھروں اور عمارتوں سے باہر نکل آئے۔ زلزلہ پیما مرکز کے مطابق زلزلے کی شدت 4 عشاریہ 2 جبکہ گہرائی صرف 43 کلومیٹر تھی۔
زلزلہ کا مرکز خضدار سے 73 کلومیٹر دور مشرق کا علاقہ بتایا گیا۔ خضدار میں آنے والے زلزلے سے قبل بدھ کے ہی روز بلوچستان کے دیگر کئی علاقوں میں بھی شدید زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔ کوئٹہ سمیت بلوچستان کے مختلف علاقوں پشین، چمن، نوشکی، قلعہ عبداللہ، گلستان، کچلاک سمیت دیگر علاقوں میں 24 گھنٹوں کے دوران تیسری بار زلزلے کے جھٹکے محسوس کئے گئے لوگ کلمہ طیبہ کا ورد کرتے ہوئے گھروں سے باہر نکل آئے تاہم کسی جانی و مالی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔
بدھ کی علی الصبح کوئٹہ چمن، قلعہ عبداللہ، نوشکی، پشین اور دالبندین سمیت پاک ایران سرحدی علاقوں میں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔زلزلہ پیماء مرکز کے مطابق ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت 5.6 ریکارڈ کی گئی، زلزلے کا مرکز کوئٹہ سے جنوب مغرب میں 166 کلومیٹر دور پاک افغان سرحد کے قریب ضلع نوشکی سے ملحقہ افغان صوبہ قندہار کا قلعہ شوراوک تھا۔
زلزلے کی گہرائی 30 کلو میٹر رکارڈ کی گئی زلزلے سے کسی جانی و مالی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز بھی بلوچستان کے مختلف علاقوں میں 2 مرتبہ زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے تھے۔ منگل کی صبح کو کوئٹہ، نوشکی اور چاغی ، چمن، قلعہ عبداللہ، پشین اور دالبندین سمیت پاک-ایران سرحدی علاقوں میں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔زلزلہ پیما مرکز کے مطابق زلزلے کی شدت 5.4 تھی، زلزلے کا مرکز کوئٹہ کے شمال مغرب میں 150 کلو میٹر دور تھا جبکہ گہرائی 35 کلومیٹر زیر زمین تھی۔ بعد ازاں منگل کی شب کو ژوب اور گردونواح میں بھی زلزلے کے زلزلے جھٹکے محسوس کئے گئے جس کی شدت 3.6ریکارڈ کی گئی تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *